148

پی آئی اے کی نجکاری اور کے خلاف ملازمین سڑکوں پر آگئے

[ad_1]

کراچی: پی آئی اے کے ملازمین نے قومی ایئرلائن کی نجکاری اور آؤٹ سورسنگ کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا اور کہا پی آئی اے قومی ادارہ ہے اسے اونے پونے بیچنے نہیں دیں دے۔

تفصیلات کے مطابق پی آئی اے کی نجکاری اور فلائٹ کچن کو ٹھیکے پر دینے کے خلاف ملازمین سڑکوں پر آگئے۔

سی بی اے یونین نے احتجاج کیا اور ملازمین نے پی آئی اے کی نجکاری پر حکام کے خلاف شدید نعرے بازی کی، ملازمین کا کہنا ہے کہ پی آئی اے قومی ادارہ ہے اسے اونے پونے بیچنے نہیں دیں دے۔

سی بی اے یونین پیپلز یونٹی کے صدر ہدایت اللہ خان کا کہنا تھا کہ پی آئی اے کو ٹکڑوں میں بیچنے کی سازش ہو رہی ہے۔

اسلام آباد فلائٹ کچن کی آؤٹ سورسنگ سے متعلق انہوں نے مزید کہا کہ فلائٹ کچن کے موجودہ اخراجات 600 ملین روپے ہیں اور انتظامیہ آؤٹ سورس کرنے کی کوشش کر رہی ہے۔ یہ 1.80 بلین روپے ہے۔

ہدایت اللہ خان نے پی آئی اے کے بااثر افراد بشمول فواد حسن فواد اور سی ای او پی آئی اے حکام پر نجکاری اور آؤٹ سورسنگ کا الزام لگایا۔

Comments



[ad_2]

Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں