150

سردی میں ’خناق‘ سے کیسے بچا جائے؟ اہم اور قیمتی مشورہ

[ad_1]

سردی کے موسم میں خناق کا وائرس تیزی سے پھیلتا ہے جس کا سب سے آسان نشانہ بچے ہوتے ہیں، یہ بیماری مریض کے کھانسنے چُھونے اور چھینکنے سے بھی لگ جاتی ہے۔

اس مرض کی علامات میں تیز بخار، خشک کھانسی، ہوا کی نالیوں میں سوزش اور بچے کے سانس لینے پر آواز آنا ہوتی ہے۔

بچوں میں خناق کی علامات اور اس کے علاج کے بارے میں اے آر وائی نیوز کے پروگرام باخبر سویرا میں ای این ٹی اسپیشلسٹ ڈاکٹر سیف اللّہ میر نے ناظرین کو اہم معلومات اور قیمتی مشورے دیئے۔

انہوں نے بتایا کہ اس بیکٹیریل وائرس کی وجہ سے بچے بہت زیادہ متاثر ہوتے ہیں جس کیلئے والدین کو چاہیے کہ فوری طور پر اس کی ویکسینیشن کرائیں۔

ڈاکٹر سیف اللّہ میر  نے بتایا کہ یہ وائس ان بچوں پر بہت جلدی اثر کرتا ہے جن کی ویکسینیشن نہیں ہوئی ہوتی یا وہ بچے جن کی قوت مدافعت کمزور ہو۔

ان کا کہنا تھا کہ متاثرہ مریض کے کمرے کی کھڑکیاں اور دروازے کھلے رکھیں ورنہ اس کے پھیلنے کا زایدہ اندیشہ ہوتا ہے۔ سب بڑوں اور بچوں کو فیس ماسک لازمی پہنائیں۔

Comments



[ad_2]

Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں